Header Ads

Breaking News
recent

فاروق ستار نے راحیل شریف اور ڈی جی رینجرز سے سیکیورٹی فراہم کرنے کی اپیل کردی

متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار نے وزیر اعظم نواز
شریف اور وزیر اعلیٰ سندھ سے مطالبہ کیا ہے کہ ان کی رہائش گاہ پر قائم پارٹی  کے عارضی ہیڈکوارٹرز کو مناسب سیکیورٹی فراہم کی جائے ۔ فاروق ستار کی جانب سے وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ سندھ کو بھیجے جانے والے خط میں انہوں نے خود کو فراہم کی جانے والی سیکیورٹی پر بھی عدم اطمینان کا اظہار کیا اور کہا کہ رینجرز کے اہلکار ان کی سیکیورٹی پر مامور کیے جائیں۔

 واضح رہے کہ فاروق ستار کی سیکیورٹی کیلئے پہلے ہی پولیس کی دو موبائل ان کے ساتھ موجود ہے تاہم انہوں نے اس پر عدم اطمینان کا اظہار کیا ہے۔ فاروق ستار کی جانب سے سیکیورٹی بڑھانے کی درخواست پی آئی بی کالونی میں ان کے گھر کے قریب نامعلوم بدلہ گروپ کی ہونے والی وال چاکنگ کے بعد سامنے آئی۔
فاروق ستار کی جانب سے مذکورہ خط کی کاپیاں سینئر وفاقی اور صوبائی حکام کے علاقہ گورنر سندھ عشرت العباد، کور کمانڈر کراچی اور ڈی جی رینجرز کو بھی بھیجی گئی ہیں۔  خط میں فاروق ستار نے موقف اختیار کیا ہے کہ پارٹی کے عارضی مرکز پر سیکیورٹی کے کوئی انتظامات نہیں ہیں جو رینجرز کی جانب سے ایم کیو ایم کے مرکز نائن زیرو اور خورشید میموریل ہال کو سیل کیے جانے کے بعد قائم کیا گیا تھا۔
انہوں نے کہا کہ ایک سال پہلے انہوں نے رینجرز کی ہدایات پر رضاکارانہ طور پر خود ہی سیکیورٹی کیلئے لگائے گئے بیریئرز ہٹادیے تھے اور اب اس بات کا خطرہ ہے کہ کوئی بھی دہشتگرد باآسانی کارروائی کرسکتا ہے۔ فاروق ستار نے وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ سندھ سے درخواست کی ہے کہ وہ صورتحال کی سنگینی اور اہمیت کو سمجھیں اور مناسب سیکیورٹی فراہم کرنے کی ہدایات جاری کریں تاکہ کسی بھی ناخوشگوار واقعے سے بچا جاسکے اور ایم کیو ایم کے رہنماؤں کا تحفظ یقینی بنایا جاسکے۔


No comments:

Powered by Blogger.