Header Ads

Breaking News
recent

اسرائیلیوں کے سامنے ڈٹ جانے والا 5 سالہ بچہ.....


اسکول جانے کی عمر کا یعنی پانچ سالہ یہ بچہ ایک احتجاجی مظاہرے کے دوران چھ مسلح پولیس اہلکاروں کو اپنے سامنے دیکھ کر بھی نہیں ڈرا اور اکیلا ہی ان پر پتھراﺅ کرنے لگا۔
یہ منظر فلسطین کے علاقے مغربی کنارے میں نظر آیا جہاں ایک احتجاجی مظاہرے کے دوران یہ چھوٹا سا بچہ مکمل فوجی لباس میں اسرائیلی اہلکاروں پر پتھراﺅ کرتا نظر آیا۔

اسرائیلی اہلکار ہیلمٹوں اور حفاظتی جیکٹیں پہنے ہوئے تھے اور حیرت زدہ انداز میں بچے کو خود پر پتھر مارتے دیکھتے رہے۔
وہ بچہ کچھ دیر تک اہلکاروں پر پتھراﺅ کرتا رہا اور پھر بھاگ کر واپس چلا گیا۔

یہ احتجاجی مظاہرہ مغربی کنارے میں فلسطینیوں کے قیدیوں کے قومی دن کے موقع پر ہورہا تھا جس کے دوران اسرائیلیوں نے آنسو گیس کے شیل اور ربڑ کی گولیوں سے احتجاجی ہجوم کو منتشر کردیا۔
اس مظاہرے کے دوران تشد کے نتیجے میں کم از کم ایک فلسطینی شہری زخمی بھی ہوا۔

خیال رہے کہ قیدیوں کا دن اسرائیلی جیلوں میں قید چھ ہزار سے زائد فلسطینیوں کے ساتھ یکجہتی کے لیے ہر سال منایا جاتا ہے۔

No comments:

Powered by Blogger.